اہلیہان بھناکھہ حلقہ ایل اے 21 پونچھ 5 کو مبارکباد۔۔۔ اظہار خیال طیب دورانی

کوئی قابل ہو تو ہم شان کہیں دیتے ہیں
ڈھونڈنے والوں کو دنیا بھی نہیں دیتے ہیں۔

میرے اہلیہان بھناکھا کے بھاہیو بزرگو دوستو سب سے پہلے آپ سب کو سلام پیش کرتا ہوں جن کے تعاون سے شکر الحمداللہ ہم لوگوں کو اللہ پاک نے اس قابل کیا کہ ہم اپنے لیے کچھ کرسکیں سب کرنے والی رب کی ذات ہے مگر ہم اشرف المخلوقات ہیں اللہ نے ایک چیونٹی کو بھی بے مقصد نہیں پیدا کیا اسی چیونٹی کی ہمت دکھ کے تمیور بادشادہ نے ملک فاتح کیا تو پھر ہم تو انسان ہیں اللہ نے ہمیں عقل سوچ دماغ دیا ہوا ہے ہماری زندگی دوسرے کے کام آے یہی بڑی سعادت ہوتی ہے
میرے بھاہیو آج دلی خوشی اور مسرت ہے کہ آج اپنی یونین کونسل بھناکھا حلقہ 5کی عوام نے اپنی مدد آپ لنک روڈ مکمل کی ہمارے حکمران تو براے نام ہی ہیں ہم ان کے پھچھے دم چھلہ بنے پھرتے ہیں مگر یہ اپنے مطلب کے لیے حلقوں میں چکر لگاکے عوام کو سنہرے خواب دیکھاتے وعدے اور دعوے کرتے اور یوں ہر بار ووٹ لے کے جب ایوان بالا کی سیٹ پہ تشریف فرما ہوتے ہیی تو سب سے پہلے یہ سب وعدے دعوے بھول جاتے ہیں ۔۔۔کہ ہم نے اپنے ووٹروں اور سپورٹروں سے کیا کیا وعدے کیے تھے کیا سہولتیں دینے کے سنہرے خواب دیکھاے تھے اور یوں کم ازکم پورے چار سال غاہب رہتے ہیں پھر نئے الیکشن قریب آتے ہی یہ پھر عوامی حلقوں میں سرگرم ہوتے ہیں اور بچاری بھولی بھالی عوام پھر انکے شکنجے میی پھنستی ہے اور اپنا قمیتی ووٹ ان پہ ضائع کردیتی ہے۔۔
پھر کس سے امید رکھی جاے کس سے توقع رکھی جاے کہ وہ عوامی مساہل حل کرنے میں مدد کریں گے ۔۔اور یوں عوام بھی مایوسی کا شکار ہوجاتی ہے ۔۔۔

آخر کار عوام جب ان سیاستدانوں سے نا امید ہوجاتی ہے پھر اپنے فصلیے خود کرتی ہے ایسا ہی ایک فصلیہ بھنا کھہ کی عوام نے کیا اور اپنے فصلیے پہ ڈٹ کے کام کیا اور اپنی مدد آپ ریکارڈ مدت میں انتہاہی شاندار روڈ کی تعمیر کرکے ان حکمرانوں کے منہ پہ طمانچہ مارا جو عوام کو جھوٹے دھوکے دیتے رہے ۔۔۔۔
مگر جب غیرت پہ بات آے تو جان کی بازی لگاکے بھی انسان کام کرلیتا ہے ہر بار اپنے حلقے کے امیدورا کو باور کروایا مگر انہوں نے کوہی توجہ نہ دی
جب کے حلقے کے ہر ایم اہل اے کو اچھے خاصے فنڈ دیے جاتے ہیی جبکہ فیڈرل گورہمنٹ بھی آزادکشمیر کی حکومت کو ترقیاتی فنڈ دیتی ہے مگر افسوس کہ یہ لیڈران اپنے بنک بھرو مہم پہ ہوتے ہیں نام کے لیے کوہی چھوٹے پراجکیٹ کردیتے ہیں اس میں سے بھی ڈنڈی ماری جاتی ہے۔
بھناکھاکے غیور فرزندوں نے اپنی مدد آپ کے تحت ایک کرڑو سے زاہد لاگت پہ دو کلو میٹر روڈ بنا کے کوٹیڑی سرچھ بھناکھ فیز 2 کی عوام کو تحفہ دیا یہ روڈ اور اس پہ سولر لاہٹ بھی لگاہی گی ہیں انہتاہی شاندار روڈ بنانے میں مقامی افراد کا تعاون ہے اس میں کہیں اور کسی تنظیم یا حکومت کا یا لوکل گورنمنٹ کا کوہی رول نہیں یہ خالصتا مقامی افراد کی ایک کرڑو سے زاہد لاگت پہ اپنی مدد آپ پہ یہ روڈ بناہی گی ہے یہ روڈ زیارت بازار سے ہاہی سکول بھناکھہ تک یہ روڈ بناہی گی ہے اس روڈ میں بھناکھا سرچھ اور کوٹیڑی کے مقامی افراد جو بیرون ممالک حصول روزگار کے سلسلے میں ہیں انہوں نے اس روڈ کو بنانے میں کردار ادا کیا اور فنڈنگ کی گی بالخصوص بیرون ملک کے افراد کا اہم کردار ہے بہت کم مدت تقربیا پانچ سے چھ ماہ کے اندر یہ روڈ مکمل کی گی سٹریس لاہٹنگ کی گی باقی جو چھوٹے موٹے کام ہیی وہ بھی ان شاء اللہ جلد مکمل ہوجاے گی اور یہ روڈ ان شاء اللہ عوام کے لیے کھول دی جاے گی
میں اپنے ان بھاہیوں بزرگوں اور دوستوں کا بے حد مشکور ہوں جنہوں نے اس روڈ کو مکمل کروانے میں بہت تعاون کیا ہے ۔۔
اگر میں ان کے نام نہ لوں تو زیادتی ہوگی یوں میں پورے علاقے کا شکر گزار ہوں ان بھاہیوں کا جنہوں نے زمین کھود کے اس کو خوبصورتی دی جنکی محنت سے یہ کام سر انجام پایا گیا
مگر خاص کر میں ان سب احباب کا تہیہ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں ۔۔۔۔

بریگیڈییر آفتاب کیانی صاحب
سید ارشد حسین صاحب
ظیہر کیانی صاحب
راجہ امتیاز صاحب
نبیل کیانی صاحب
راجہ اشفاق صاحب
ڈاکٹر نوید صاحب ( یوکے )سے
عمران کیانی صاحب
راجہ ذوالقرنین صاحب
روف کیانی صاحب
وحید کیانی صاحب
راجہ ندیم صاحب
سجاد اشرف صاحب
ویسم افتخار صاحب
بابر صاحب
زاہد کیانی صاحب
تنویر اسماعیل ترین صاحب
طاہر محمود ترین صاحب
سید تصدق حسین شاہ صاحب
سید ظہور حیدر شاہ صاحب
سید کبیر اللہ شاہ صاحب
سید محسود گردیزی صاحب
سید نیاز احمد جعفری صاحب
سید آزاد حسین جعفری صاحب
عبدالقیوم کیانی صاحب
امجد کیانی یو اے ای
کبیر کیانی یو اے ای

اللہ پاک سب کے صدقہ جاریہ کو منظور و مقبول فرماے کیونکہ انسان وہی ہوتا ہے جو دوسروں کے کام آے
راستوں کی رکاوٹوں کو دور کرکے صاف شفاف راستے دیے جاہیں
اگر راستے میں سے ایک کانٹا بھی ہٹا دیا جاے تو اسکا بھی بہت اجر و ثواب ہے
ان تمام محترم حضرات کا شکریہ جنہوں نے تعاون کیا اور ہر ایک نے دل کھول کے تعاون کیا ہے مقامی افراد کے علاوہ میں ان احباب کا بھی شکریہ ادا کرتا ہوں جنکا تعلق یہاں سے نہیں بھی تھا انہوں نے بھی تعاون کیا اللہ قبول فرماے اور میں اپنی تمام صحافی برادری کا بھی شکریہ ادا کرتا ہوں کہ جنہوں نے اس پروجیکٹ کو ہائی لائٹ کیا میڈیا کے ذریعے
میں سپشل شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں ظہیر کیانی صاحب جو یوکے سے اور ڈاکٹر نوید صاحب یوکے سے جنہوں نے چوک پہ بورڈ لگواے ہیں ان دونوں کا بے حد شکریہ جنہوں نے اپنے گاوں کے لوگوں کو تحفہ دیا اور جو روڈ پہ سٹریٹس لاہٹ لگاہی گی یہ سپشل ظیہر کیانی صاحب یہ لاہٹ لگوانے میی اہم رول ہے اللہ پاک ان تمام احباب کو بشمار عطا فرماے جہنوں نے اپنے علاقے کی مشکلات کو مد نظر رکھتے ہوے یہ روڈ مکمل کرواہی میں ایک بار پھر سب کا بے حد شکریہ ادا کرتا ہوں

اگرانسان ہمت کرے تو کوہی کام مشکل نہیں ہے امید ہے ایندہ بھی فلاحی کاموں میں ایسے ہی سب احباب تعاون کریں گے کیونکہ انسان پوری زندگی کماتا ہے تو کچھ اللہ کے دیے ہوے رزق سے

اپنا تبصرہ بھیجیں