ٹیکنالوجی کے نقصانات سے بچنے کے لئے چند نکات

ٹیکنالوجی کے نقصانات سے بچنے کے لئے چند نکات

اس دہائی کے دوران ٹیکنالوجی نے بہت ترقی کی ہے ، کوئی بھی جدید ترین مصنوعات استعمال کیے بغیر نہیں جی سکتا۔ جدید ترین ٹیکنالوجی نے انسان کی زندگی کو مکمل طور پر تبدیل کردیا ہے لیکن ٹیکنالوجی کے ان گنت فوائد کے باوجود اس کے کچھ نقصانات بھی ہیں۔ اگر آپ بہت ساری پروڈکٹ یا اوزار صحیح طریقے سے استعمال نہیں کریں گے تو آپ کی صحت متاثر ہوگی۔ آپ کو اپنی صحت کے حوالے سے بہت محتاط رہنے کی ضرورت ہے اور صحتمند رہنے کے لئے حفاظتی نکات پر عمل کرنا چاہئے۔ یہاں میں کچھ مشورے لکھوں گا جو تناؤ سے بچنے اور جدید ٹیکنالوجی کے نقصانات سے دور رکھنے کے لئے مددگار ثابت ہوں گے۔ ٹیکنالوجی کے نقصانات سے بچنے کے لئے ان نکات کو پڑھیں۔

سوشل میڈیا پر نامعلوم افراد کو فرینڈ لسٹ میں شامل یا ان کی پیروی نہ کریں

اگر آپ اپنے گھر والوں اور دوستوں سے رابطہ قائم کرنے کے لئے سوشل میڈیا کا استعمال کریں گے تو آپ خوش ہوں گے جب آپ ان کی اپلوڈ کردہ تصاویر یا پوسٹس دیکھیں گے. لیکن اگر آپ نے نامعلوم افراد کو شامل کیا ہے یا ان کی پیروی کی ہے تو یہ آپ کو دباؤ میں ڈال سکتا ہے. کیونکہ ہوسکتا ہے کہ وہ ایسا کچھ اپ لوڈ کردیں جسے آپ پسند نہیں کرتے. مزید یہ کہ نامعلوم افراد کی پوسٹس پڑھتے ہوئے اپنا قیمتی وقت ضائع کرنا اچھا خیال نہیں ہے۔ آپ کی سلامتی اور حفاظت کے لئے نامعلوم افراد کو شامل کرنا یا ان کی پیروی کرنا بھی اچھا نہیں ہے۔

موبائل ، کمپیوٹر یا ٹی وی کے زیادہ استعمال سے پرہیز کریں

اچھا یہ ہے کہ آپ اپنے کاروباری کام کے علاوہ موبائل ، کمپیوٹر یا ٹی وی کے استعمال کے لیے کچھ وقت مقرر کریں۔ الیکٹرک ڈیوائسز کی کرنیں انسانی صحت کے لیے ٹھیک نہیں ہیں اور اپنے آفس اوقات کے دوران آپ موبائل اور کمپیوٹر کا استعمال کرتے ہو جیسے اس کی ضرورت ہوتی ہے۔ لہذا اگر آپ کام کے اوقات کے بعد بھی اپنے آپ کو کمپیوٹر ، ٹی وی یا موبائل میں ہی مصروف رہیں گے تو آپ کی صحت بری طرح متاثر ہوگی۔ لہذا آپ کو ان سرگرمیوں کے لئے وقت تفویض کرنے کی ضرورت ہے۔ اگر آپ کے کام کے دوران آپ کو کمپیوٹر کے سامنے رہنا پڑتا ہے تو پھر یہ بھی مشورہ دیا جاتا ہے کہ تازہ ہوا حاصل کرنے کے لئے ہر دو ، تین گھنٹے کے بعد 5 سے 10 منٹ کے لئے باہر جائیں۔

اپنے آلات اور اینٹی وائرس کو اپ ڈیٹ رکھیں

اگر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کا فون ، ٹیبلٹ ، لیپ ٹاپ یا کمپیوٹر صحیح طریقے سے چلے تو پھر سافٹ ویئر یا ایپلیکیشن اپ ڈیٹ کو جاری رکھیں جو آپ کے آلے کو تازہ دم رکھتا ہے اور آپ کے اینٹی وائرس کو ہمیشہ اپ ڈیٹ کرتا ہے۔ اینٹی وائرس کے تازہ ترین ورژن والے آلات میں وائرس کے حملوں کے امکانات کم ہیں۔

پڑھنے کے لئے اچھی سکرین

اگر آپ کو ایک لمبی کہانی ، لمبی ای میل یا لمبی کوٹیشن یا تجاویز پڑھنی ہیں تو پھر اسے چھوٹے موبائل اسکرین پر پڑھنے سے گریز کریں۔ اچھی عادت یہ ہے کہ موبائل کی چھوٹی اسکرینوں کے بجائے اسے لیپ ٹاپ ، کمپیوٹر یا ٹیب پر پڑھیں۔ اگر آپ روزانہ کی بنیاد پر چھوٹی موبائل اسکرینوں پر بڑی بڑی کہانیاں پڑھتے ہیں تو آپ کی نگاہ متاثر ہوگی۔

کثرت سے پاس ورڈ تبدیل کریں

آپ کو مختلف آلات اور ویب سائٹوں کے لئے اپنا پاس ورڈ مضبوط اور مختلف رکھنا چاہئے۔ پاس ورڈ کی چوری یا ہیکنگ سے بچنے کے لیے آپ کو اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس پر یا اپنے آلات پر ہر چھ ماہ بعد کم از کم اپنا پاس ورڈ تبدیل کرنا چاہئے۔

اپنی لاگ ان کی معلومات شیئر نہ کریں

آپ کو اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ کے پاس ورڈ یا صارف کے نام کسی کے ساتھ شیئر نہیں کرنا چاہیے۔ بعض اوقات لوگ اپنے معاملات میں مدد کے لیے اپنے صارف کے نام اور پاس ورڈ دوسروں کے ساتھ بانٹ دیتے ہیں جو کہ اچھی عادات نہیں ہے۔ آپ کے صارف نام اور پاس ورڈ کو آپ کی معلومات کے بغیر غیر قانونی مقاصد کے لئے استعمال کیا جاسکتا ہے۔

جعلی خبروں کا شیئر یا ردعمل نہ کریں

لوگ اپنے مخالفین کے خلاف یا اپنے کاموں کی تکمیل کے لئے جعلی خبریں سوشل میڈیا پر شیئر کررہے ہیں۔ آپ کو تصدیق کے بغیر کسی بھی چیز کا شیئر یا ردعمل نہیں کرنا چاہئے۔

گالی نہ دیں

کبھی بھی سوشل میڈیا پر کسی کے ساتھ زیادتی نہ کریں کیونکہ آپ کے بہت سے دوست اور کنبہ کے ممبر آپ کی پوسٹس دیکھ رہے اور پڑھ رہے ہیں۔ اگر آپ کسی سے زیادتی کرتے ہیں تو آپ کے خاندان اور دوستوں کے درمیان آپ کی ساکھ بری طرح متاثر ہوگی۔

کبھی بھی اپنا ذاتی موبائل ، ٹیب ، لیپ ٹاپ یا کمپیوٹر فروخت نہ کریں

آپ کو ہارڈ ڈسکوں سے اپنے ڈیٹا کو مکمل طور پر حذف کیے بغیر اپنے ذاتی موبائل فون ، ٹیب ، لیپ ٹاپ یا کمپیوٹر کو فروخت نہیں کرنا چاہئے۔ اگر آپ کو یقین نہیں ہے کہ آپ کا ڈیٹا حذف ہوگیا ہے یا آپ کو شبہ ہے کہ نیا صارف جس نے آپ کا آلہ خریدا وہ آپ کے حذف شدہ اعداد و شمار کو کچھ ٹولز کے ساتھ واپس لاسکتا ہے تو آپ اپنا آلہ فروخت نہ کریں۔ بیچنے کے بجائے آپ اپنے گھر والے میں کسی کو دے سکتے ہیں۔